بدھ , اپریل 24 2019
Home / اہم خبریں / کرتارپور سرحد کھولنے سے سکھ برادری خوشی سے نہال۔

کرتارپور سرحد کھولنے سے سکھ برادری خوشی سے نہال۔

کراچی (اسٹاف رپورٹر) پاکستان سکھ کائونسل کی جانب سے کرتار پور سرحد کھولنے پر خوشی کا اظہار اور اس قدم کو امن کا پہلا قدم قرار دیا گیا۔ تفصیلات کے مطابق پاکستان سکھ کائونسل کی جانب سے کراچی پریس کلب میں پریس کانفرنس کرتے ہوئے کائونسل کے سربراہ دیپک سنگھ اور سردار کرشن سنگھ نے کہا کہ کارتارپور سرحد کھولنا پاکستان کی جانب سے امن کا پہلا قدم ہے۔ ہم بھارت سے بھی اسی عمل کی امید رکھتے ہیں۔ کرتار پور سرحد کا کھلنا سکھ برادری کی جدوجھد کا نتیجہ ہے۔انہوں نے کہا کہ گوردوارا دربار جتی پر بابا گرو نانک صاحب نے اپنی زندگی کے 18 سال گزارے۔ اور اسی نام پر صوفی شاعر بابا غلام فرید نے بھی کافی کارہائے نمایاں انجام دیے۔ انہوں نے کہا کہ آج سکھ برادری کے لیے ایک تاریخی دن ہے۔پوری دنیا میں سکھ برادری اس قدم سے بہت خوش ہے۔ انہوں نے کہ بھارت کی وزیر خارجہ سشما سوراج کا اس تقریب میں نہ آنے سے غلط تاثر ملا ہے بہتر ہوتا اگر وہ بھی اس تقریب میں شامل ہوتیں۔

اس موقع پر رمیش سنگھ نے کہا کہ دونوں ملکوں کی عوام امن چاہتی ہے۔سرحدیں کھلنے سے قرابت داری اور پڑوسی ملک بھارت کے ساتھ تجارت کو بھی فروغ ملے گا۔ انہوں نے مزید کہا کہ ہم پاکستان اور سندھ گورنمنٹ سے مطالبہ کرتے ہیں کہ کراچی میں سکھوں کے تاریخی گوردواروں سے قبضے ختم کروائے جائیں۔ کراچی میں ایک خاکسار اسکول تھا وہ بھی اب قبضے میں ہے ہم امید کرتے ہیں کہ ہمارے تاریخی ورثے بحال کیے جائیں گے۔اس موقع پر انہوں نے مطالبہ کیا کہ متروکہ جائیداد کے بورڈ کی چئیرمن شپ سکھ برادری کے حوالے کی جائے۔

یاد رہے کہ پاکستان اور انڈیا کے درمیان کرتار پور راہداری کے قیام کے بعد سکھوں کے لئے گوردوارہ دربار صاحب کا درشن بنا ویزے کے ممکن ہوگا۔ پاکستان کے وزیراعظم عمران خان نے راہداری کی بنیاد رکھی۔ گو کہ اس راہداری کی تعمیرات میں ایک سال کا وقت لگے گا لیکن سکھ برادری اپنے اس تاریخی اور مقدس مقام کے لئے ابھی سے پرجوش نظر آرہے ہیں۔

Check Also

ذولفقارعلی بھٹو ایک تاریخ ساز شخصیت

ذولفقارعلی بھٹو ایک تاریخ ساز شخصیت

ضحیٰ مرجان ذولفقارعلی بھٹو ایک تاریخ ساز شخصیت ہیں۔ پیپلز پارٹی کے جیالوں کی تاریخ …