بدھ , اپریل 24 2019
Home / اہم خبریں / عابد علی، محمد رضوان کی سنچری رائیگاں، پاکستان جیتا ہوا میچ ہار گیا
پاکستان جیتا ہوا میچ ہار گیا
پاکستان جیتا ہوا میچ ہار گیا

عابد علی، محمد رضوان کی سنچری رائیگاں، پاکستان جیتا ہوا میچ ہار گیا

محمد واحد

پاکستان جیتا ہوا میچ ہار گیا، عابد علی اور محمد رضوان کی سنچریوں کے باوجود پاکستانی ٹیم ہار سے اپنا دامن نہ چھڑاسکی۔ آسٹریلیا نے دلچسپ مقابلے کے بعد چوتھا ایک روزہ انٹرنیشنل میچ 6 رنز سے جیت لیا۔

عابد اور رضوان نے تیسری وکٹ پر 144 رنز جوڑ کر پاکستان کو جیت کی پوزیشن میں لاکھڑا کیا تھا لیکن بعد کے بلے بازوں کی غیر ذمے داری اورناتجربہ کاری کے باعث پاکستان ایک اور جیتا ہوا میچ ہار گیا۔ گرین شرٹس کو آخری تین اوورز میں 25 رنز درکار تھے اور اس کی 6 وکٹیں باقی تھیں، لیکن پاکستانی ٹیم 4 وکٹوں کے نقصان پر 18 رنز ہی بناسکی۔

یہ ون ڈے کی تاریخ کا چوتھا موقع ہے جب ہدف کا تعاقب کرتے ہوئے کسی ٹیم کے جانب سے دو سنچریاں اسکور کی گئی ہوں لیکن اُس کے باوجود بھی اُسے شکست ہوئی ہو۔ گلین میکسیویل اور ایلکس کیری کی 134 رنز کی شراکت نے آسٹریلیا کو 277 رنز کا مجموعہ اسکور بورڈ میں سجانے میں مدد فراہم کی۔ میکسیویل نے جارحانہ اننگز کھیلی اور صرف 2 رنز کی کمی سے سنچری اسکور نہ کرسکے۔

دبئی کرکٹ اسٹیڈیم میں کھیلے گئے پانچ میچوں کی سیریز کے چوتھے ون ڈے میں زخمی شعیب ملک کی جگہ ٹیم کی قیادت کرنے والے عماد وسیم نے ٹاس جیت کر آسٹریلیا کو بیٹنگ کی دعوت دی۔ عثمان خواجہ اور ایرون فنچ نے پھر اچھی شروعات کی اور آسٹریلیا کو 56 رنز کا آغاز فراہم کیا۔ اس موقع پر کیرئیر کا تیسرا ون ڈے کھیلنے والے محمد حسنین نے فنچ کو ایل بی ڈبلیو کردیا۔ ایرون فنچ نے 5 چوکوں اور ایک چھکے کی مدد سے 39 رنز بنائے۔عماد وسیم نے شان مارش کو صرف 5 رنز پر پویلین واپس بھیج دیا۔ عثمان خواجہ اور پیٹر ہینڈز کومب نے محتاط بیٹنگ کرتے ہوئے ٹیم کا اسکور 98 رنز تک پہنچا دیا۔

آسٹریلیا کی تیسری وکٹ ہینڈز کومب کی گری، جنہیں 7 رنز پر عماد وسیم نے حارث سہیل کے ہاتھوں کیچ کرایا۔ اسٹوئنس کو 2 رنز پر یاسر شاہ نے اپنا شکار بنایا۔ 140 کے مجموعے پر یاسر شاہ عثمان خواجہ کو آؤٹ کرکے کینگروز کو دباؤ میں لے آئے۔ خواجہ نے 62 رنز اننگز کھیلی، جس میں 6 چوکے شامل تھے۔

مشکل صورتحال میں گلین میکسیویل اور ایلکس کیری نے چھٹی وکٹ پر 134 رنز کی شراکت کرکے ٹیم کا اسکور 274 رنز پر پہنچادیا۔ اس اسکور پر میکسیویل 98 رنز بناکر رن آؤٹ ہوگئے۔ ان کی 82 گیندوں کی اننگز میں 9 چوکے اور 3 چھکے شامل ہیں۔ اننگز کی آخری گیند پر ایلکس کیری جارحانہ شاٹ کھیلنے کی کوشش میں حارث سہیل کے ہاتھوں کیچ آؤٹ ہوکر محمد حسنین کا دوسرا شکار بنے۔ کیری نے 3 چوکوں کی مدد سے 55 رنز اسکور کیے۔ آسٹریلیا نے مقررہ 50 اوورز میں 7 وکٹوں پر 277 رنز بنائے۔ محمد حسنین، عماد وسیم اور یاسر شاہ نے 2,2 وکٹیں حاصل کیں۔

278 رنز کے تعاقب میں پاکستان کو پہلے ہی اوور میں شان مسعود کا نقصان اٹھانا پڑا جنہیں صفر پرکارٹرنائل نے بولڈ کردیا۔ اپنا پہلا ون ڈے کھیلنے والے عابد علی نے حارث سہیل کے ساتھ مل کر ٹیم کا اسکور 74 رنز پر پہنچادیا۔ اس موقع پر حارث 25 رنز بناکر نیتھن لائن کا شکار بنے۔

عابد علی نے وکٹ کیپر محمد رضوان کے ساتھ ریکارڈ شراکت کرکے پاکستان کی پوزیشن کو مستحکم بنادیا۔ دونوں بلے بازوں کی 144 رنز کی شراکت آسٹریلیا کے خلاف دوسری وکٹ کی پاکستان کی جانب سے سب بڑی شراکت ہے۔ عابد علی نے 111 گیندوں پر سنچری مکمل کرکے ڈیبیو میچ میں سنچری اسکور کرنے والے تیسرے پاکستانی بلے باز کا اعزاز حاصل کرلیا۔ ساتھ ہی انہوں نے پہلے ون ڈے میں سب سے زیادہ 102 رنز بنانے کا سہیل الٰہی کا ریکارڈ بھی توڑ دیا۔ پاکستان کی جانب اپنے پہلی ہی ون ڈے میں سنچری بنانے والے دوسرے کھلاڑی امام الحق ہیں۔

عابد علی سنچری مکمل کرنے کے بعد تیز رفتاررنز بنانے کی کوشش میں ایڈم زیمپا کی گیند میں لانگ آن پر کھڑے ایرون فنچ کے ہاتھوں کیچ ہوگئے۔ انہوں نے 112 رنز اسکور کیے، جس میں 9 چوکے شامل ہیں۔ اس وقت پاکستان کا اسکور 42 ویں اوور میں 218 رنز تھا۔ عمر اکمل پھر ناکام ثابت ہوئے اور 7 رنز بنانے کے بعد کارٹر نائل کو چھکا مارنے کی کوشش میں بولڈ ہوگئے۔

پہلا ون ڈے کھیلنے والے سعد علی بھی 7 رنز بنانے کے بعد کارٹر نائل کی گیند پر مڈوکٹ باؤنڈری پر رچرڈ سن کو کیچ دے بیٹھے۔ کپتان عماد وسیم صرف ایک رنز بناکر پویلین لوٹ گئے۔ اس دوران محمد رضوان نے کیریئر اور سیریز کی دوسری سنچری مکمل کی۔ رضوان آخری اوور میں 104 رنز بناکر اسکوائر لیگ باؤنڈری پر کیچ ہوگئے۔ ان کی وکٹ اسٹوئنس کے حصے میں آئی۔ رضوان نے 102 گیندیں کھیل کر 9 چوکے اور ایک چھکا لگایا۔

پاکستان کو آخری تین گیندوں پر 13 رنز درکار تھے۔ چوتھی گیند پر عثمان شنواری نے چھکا لگا کر میچ کو سنسنی خیز بنادیا تھا لیکن اگلی ہی گیند پر وہ مڈوکٹ باؤنڈری پر کیچ ہوگئے۔ آخری گیند پر یاسر شاہ ایک رنز ہی لے سکے۔ پاکستانی ٹیم 50 اوورز میں 8 وکٹوں پر 271 رنز بناکر میچ 6 رنز سے ہار گئی۔ کارٹر نائل نے 3 وکٹیں حاصل کیں، اسٹوئنس 2، لائن، زیمپا اور رچرڈ سن نے ایک ایک وکٹ حاصل کی۔ شاندار بیٹنگ پر گلین میکسیویل کو میچ کا بہترین کھلاڑی قرار دیا گیا۔

سیریز کا آخری ون ڈے اتوار 31 مارچ کو دبئی میں کھیلا جائے گا۔

Check Also

آسٹریلیا نے پاکستان کو 0-5 سے وائٹ واش کردیا

محمد واحد آسٹریلیا نے پاکستان کو 0-5 سے وائٹ واش کردیا. ورلڈکپ سے قبل اہم …