بدھ , اپریل 24 2019
Home / کاروبار / اسٹاکس پر سیاسی حالات کا اثر ھوتا ہے۔ رچرڈ مورین

اسٹاکس پر سیاسی حالات کا اثر ھوتا ہے۔ رچرڈ مورین

کراچی (بزنس رپورٹر)پاکستان اسٹاک ایکسچینج(پی ایس ایکس) کے منیجنگ ڈائریکٹر رچرڈ مورین نے کہا ہے کہ پاکستان میں کیپیٹل اور کرنسی مارکیٹ پاکستان کے معاشی حالات کے ساتھ ساتھ عالمی اقتصادی اور سیاسی حالات کی وجہ سے متاثر ہوئی ہیں۔

عالمی منڈیاں بحران کے دور سے گزر رہی ہیں اور اس وجہ سے پاکستان جیسی بڑھتی ہوئی مارکیٹیں خاص طور پر متاثر ہو رہی ہیں۔ ابھرتی ہو ئی مارکیٹوں کے انڈکس میں تقریباً 14 فیصد کی کمی ہوئی ہے، دوسری مارکیٹیں جس میں چین کی اسٹاک مارکیٹ شامل ہے متاثر ہوئیں ،ان کے انڈکس25 فیصد تک کم ہوئے ہیں۔

اپنے ایک انٹر ویو میں انہوں نے کہا کہ ان حالات کی وجہ سے کرنسی مارکیٹیں بھی متاثر ہو ئی ہیں بعض ممالک کو ان حالات سے نکلے کے لیے اپنی کرنسی کی قدر میں 90 فیصد تک کمی کرنی پڑی ہے، ارجنٹینا نے اپنی کرنسی کی قدر ۹۰ فیصد کم کی، بھارت نے اپنے روپے کی قدر 15فیصد کم کی،پاکستان کااپنی کرنسی کی قدر میں کمی کیئے بغیر ان حالات سے نکلنا مشکل تھا،لہذا اس نے روپے کے قدر 19فیصد کم کی،رچرڈ مورین نے کہا کہ عالمی ابھرتی ہوئی مارکیٹوں کی کارکردگی اچھی نہیں ہے، ہمیں عالمی حالات پر نظر رکھنی ہے کہ دنیا میں کیا ہو رہا ہے۔

تمام ابھرتی ہوئی مالی منڈیاں اور اس میں پاکستان شامل ہے ایک مرحلے سے گزرتی ہیں اور عالمی حالات سے متاثر ہوتی ہیں۔ ان میں امریکا کی جانب سے سود کی شرح میں اضافہ اورچین کے ساتھ جنگی راستہ اپنانا اور دنیا کہ دوسرے حالات شامل ہیں،عالمی منڈی میں تیل کی قیمتیں بھی بڑھی ہیں،اگرچہ یہ حالات ناخوشگوار ہیں لیکن ان کے بارے میں سرمایہ کاروں کو لمبے عرصے کے لیے پریشان نہیں ہونا چائیے اور اس کو عالمی تناطر میں دیکھا جائے، میں پاکستان میں بہت زیادہ مواقع دیکھتا ہوں،

انہوں نے تجویز دی کہ وہ شیئرز خریدیں اور ان کو اپنے پورٹ فولیو میں لمبی مدت کے لیے رکھیں،اگر شیئرز خریدنا مشکل ہے تو میوچل فنڈز میں سرمایہ کاری کریں،انہوں نے کہا کہ پی ایس ایکس کی ٹرانسفارمیشن کا عمل شروع ہو چکا ہے اور یہ اگلے تین سال تک جا ری رہے گا،ٹرانسفارمیشن کے علاوہ ایک اہم مقصد پاکستانی سرمایہ کاروں کو مارکیٹ میں سرمایہ کاری کے لیے لانا ہے یہ بنیادی مسئلہ ہے جو کہ ہمیں حل کرنا ہے،جب ہم نئے سرمایہ کاروں کو مارکیٹ میں لانے میں کامیاب ہوں گے توہم پاکستان کی کیپیٹل مارکیٹ کو ٹرانسفارم کرنے اور اس کی معاشی کامیابی میں حصہ ڈالیں گے۔

انہوں نے کہا کہ پی ایس ایکس کا اسٹاک آپشن اور انڈکس آپشن جیسی نئی پروڈکٹس متعارف کرانا چاہتی ہے لیکن اس سے پہلے اس کو ٹریڈنگ کے نئے نظام کو نصب کرانا لازمی ہو گا،اس وقت دو ٹریڈنگ کے نظام زیر بحث ہیں اور ان میں سے ایک کو پاکستان اسٹاک ایکس چینج میں نصب کیا جائے گا،یہ نیا نظام پی ایس ایکس کی موجودہ تمام پراڈکٹس کو سپورٹ کرتا ہے اس میں فیوچرز مارکیٹ اور قرضوں کی سکیورٹیز اور نئی پراڈکٹس جیسا کہ اسٹاک آپشن اور انڈیکس آپشن بھی شامل ہیں۔

Check Also

آئی کیپ کے تحت نیشنل ٹیکس کانفرنس 2019 کا انعقاد

اسلام آباد (اسٹاف رپورٹر) ملکی معیشت کی ترقی میں رکاوٹ بننے والے ٹیکس معاملات پر …