بدھ , اپریل 24 2019
Home / بین الاقوامی / آسٹریلیا کی پاکستان کے خلاف فتوحات کی ہیٹ ٹرک
آسٹریلیا کے خلاف تیسرے ایک روزہ میچ میں پاکستانی کپتان شعیب ملک آووٹ ہوتے ہوئے
آسٹریلیا کے خلاف تیسرے ایک روزہ میچ میں پاکستانی کپتان شعیب ملک آووٹ ہوتے ہوئے

آسٹریلیا کی پاکستان کے خلاف فتوحات کی ہیٹ ٹرک

محمد واحد

آسٹریلیا نے تیسرا ایک روزہ انٹرنیشنل میچ 80 رنز سے جیت کر پاکستان کے خلاف فتوحات کی ہیٹ ٹرک کرنے کے ساتھ پانچ میچوں کی ون ڈے سیریز میں 0-3 کی فیصلہ کن برتری حاصل کرلی ہے۔

 

 

 

کینگروز کپتان ایرون فنچ کی ذمے دارانہ بیٹنگ اور فاسٹ بولر پیٹ کمنز کی تباہ کن بولنگ نے آسٹریلیا کی جیت میں اہم کردار ادا کیا۔ فنچ 10 رنز کی کمی سے مسلسل تیسری سنچری اسکورکرنے میں ناکام رہے۔ کمنز نے صرف 16 کے مجموعے پر3 بلے بازوں کو آؤٹ کرکے پاکستانی ٹیم پر ایسا دباؤ ڈالا جس سے وہ باہر نکل نہ سکی اور پوری ٹیم 45 ویں اوررز میں پویلین لوٹ گئی۔ کمنز کو گرین شرٹس پر کیے گئے ابتدائی کاری وار پر میچ کا بہترین کھلاڑی قرار دیا گیا۔

ابوظہبی میں کھیلے گئے سیریز کے تیسرے ون ڈے میں آسٹریلیا نے ٹاس جیت کر بیٹنگ کا فیصلہ کیا۔ ابتدا میں ایرون فنچ کا یہ فیصلہ ٹیم کے حق میں بہتر ثابت نہیں ہوا۔ ایک رنز پر عثمان خواجہ اور 20 کے مجموعے پر شان مارش آؤٹ ہوگئے۔ خواجہ کو عثمان شنواری نے کھاتہ کھولنے کا موقع نہیں دیا جبکہ مارش 14 رنز بناکر جنید خان کا شکار بنے۔

فنچ پھر پاکستانی بولرز کے سامنے ڈٹ گئے اور پیٹر ہینڈز کومب کے ساتھ مل کر ٹیم کا اسکور 104 رنز تک پہنچادیا۔ اس موقع پر ہینڈز کومب کو 47 رنز پر حارث سہیل نے بولڈ کردیا۔ ہینڈز کومب نے 6 چوکے لگائے۔ کینگروز کو چوتھا نقصان مارکوس اسٹوئنز کا اٹھانا پڑا جس کی وکٹ 10 رنز پر عماد وسیم نے اڑا دی۔ اس وقت تک آسٹریلیا نے 140 رنز بنالیے تھے۔

مشکل وقت میں ایرون فنچ نے گلین میکسویل کے ساتھ اسکور آگے بڑھانا شروع کیا۔ فنچ نے گزشتہ دو ون ڈے کے برعکس سست بیٹنگ کی اور وہ آہستہ آہستہ مسلسل تیسری سنچری کی جانب قدم بڑھا رہے تھے، لیکن یاسر شاہ نے حارث سہیل کی مدد سے سنچری سے 10 رنز قبل ہی فنچ کو قابو کرلیا۔ ایرون فنچ نے 90 رنز میں 5 چوکے اور ایک چھکا لگایا۔ فنچ 42 ویں اوورز میں آؤٹ ہوئے اور اس وقت کینگروز کا اسکور 188 رنز تھا، لیکن میکسویل کی جارحانہ اننگز کی بدولت آسٹریلیا نے آخری 8 اوورز میں 78 رنز بنائے۔ میکسیویل 71 رنز اسکور کرکے رن آؤٹ ہوگئے۔ انہوں نے 55 گیندیں کھیلیں اور 8 چوکے اور ایک چھکا لگایا۔ ایلکس کیری 25 اور پیٹ کمنز 2 رنز بنا کر ناٹ آؤٹ رہے۔

آسٹریلیا نے مقررہ 50 اوورز میں 6 وکٹوں پر 266 رنز اسکور کیے۔ جنید خان، عثمان شنواری، عماد وسیم، حارث سہیل اور یاسر شاہ نے ایک، ایک وکٹ حاصل کی۔ محمد حسنین جن کے دوسرے ون ڈے میں بولنگ کی سب نے تعریف کی تھی کافی مہنگے ثابت ہوئے اور ان کے 5 اوورز نے آسٹریلوی بلے بازوں نے 50 رنز اسکور کیے۔

آسٹریلیا کی طرح پاکستانی اننگز کا آغاز بھی اچھا نہ تھا اور3 بیٹسمین صرف 16 رنز پر آؤٹ ہوگئے۔ تینوں وکٹیں کمنز نے حاصل کیں۔ شان مسعود 2، حارث سہیل ایک رنز بناکر آؤٹ ہوئے۔ دوسرے ون ڈے کے سنچری میکر محمد رضوان کو تو کمنز نے کھاتہ کھولنے کا موقع بھی دیا۔ فیلڈ امپائر نے تو رضوان کو ناٹ آؤٹ قرار دیا تھا لیکن ریویو لینے پر گیند رضوان کے بلے کو چھوتی ہوئی وکٹ کیپر کے پاس پہنچی نظر آئی، جس پر امپائر کو اپنا فیصلہ تبدیل کرتے ہوئے آؤٹ قرار دینا پڑا۔

ابتدا میں 3 بیٹسمینوں کے آؤٹ ہونے پر گرین شرٹس دباؤ میں آگئے۔ کپتان شعیب ملک اور امام الحق نے ٹیم کا اس مشکل صورتحال سے نکالنے کی کوشش کی اور 21 ویں اوور میں پاکستان کا اسکور 75 رنز تک پہنچایا۔ اس موقع پر امام الحق 46 رنز بناکر گلین میکسویل کے ہاتھوں ایل بی ڈبلیو ہوگئے۔ امام الحق نے 72 گیندیں کھیل کر 2 چوکے اور 2 چھکے لگائے۔

پاکستان کو چوتھا نقصان کپتان شعیب ملک کا اٹھانا پڑاجو 32 رنز بناکر پویلین لوٹے۔ ملک نے 50 گیندیں کھیلیں اور صرف ایک چوکا لگایا۔ عمر اکمل اور عماد وسیم نے 53 رنز کی شراکت کرکے ٹیم کا اسکور 149 رنز پر پہنچایا۔ اس وقت ایسا لگ رہا تھا کہ شاید پاکستانی ٹیم میچ میں واپس آگئی ہے، لیکن عمر اکمل کے 36 رنز پر آؤٹ ہوتے ہی جیت کی امیدیں بھی دم توڑ گئیں۔ عمر کی اننگز 3 چوکوں سے مزین تھی۔

عماد وسیم نے کچھ مزاحمت کی اور4 چوکوں کی مدد سے 43 رنز بناکر آؤٹ ہوئے۔ اس وقت ٹیم کا اسکور 178 رنز تھا۔ پاکستان کی آخری 4 وکٹیں صرف 8 رنز کے اضافے سے گریں۔ عثمان شنواری اور محمد حسنین بغیر کوئی رنز بنائے آؤٹ ہوئے۔ جنید خان نے 5 رنز اسکور کیے۔ یاسر شاہ 10 رنز پر ناٹ آؤٹ رہے۔

گرین شرٹس 44.4 اوورز میں 186 رنز بناکر آؤٹ ہوکر مچ 80 رنز سے ہار گئے۔ ایڈم زیمپا نے سب سے زیادہ 4 وکٹیں حاصل کیں، جس کے لیے انہوں نے 43 رنز دیے۔ پیٹ کمنز نے 3 کھلاڑیوں کو 24 رنز کے عوض آؤٹ کیا اور میچ کے بہترین کھلاڑی رہے۔

آسٹریلیا نے مسلسل تیسرے ون ڈے میں کامیابی کے ساتھ 5 میچوں کی سیریز میں 0-3 کی فیصلہ کن برتری حاصل کرلی۔ سیریز کا چوتھا ایک روزہ انٹرنیشنل میچ جمعہ 29 مارچ کا ابوظہبی جبکہ پانچواں اور آخری ون ڈے اتوار 31 مارچ کو دبئی میں کھیلا جائے گا۔

Check Also

آسٹریلیا نے پاکستان کو 0-5 سے وائٹ واش کردیا

محمد واحد آسٹریلیا نے پاکستان کو 0-5 سے وائٹ واش کردیا. ورلڈکپ سے قبل اہم …